Azaranica is a non-biased news aggregator on Hazaras and Hazarajat...The main aim is to promote understanding and respect for cultural identities by highlighting the realities they are facing on daily basis...Hazaras have been the victim of active persecution and discrimination and one of the reasons among many has been the lack of information, awareness and disinformation...... To further awareness against violence, disinformation and discrimination, we have launched a sister Blog for youths and youths are encouraged to share their stories and opinions; Young Pens

Friday, November 1, 2013

بلوچستان: گاڑی پر فائرنگ، ہزارہ برادری کے چھ مزدور ہلاک



آخری وقت اشاعت: جمعـء 1 نومبر 2013 ,‭ 11:51 GMT 16:51 PST


بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ کے بعد مچھ میں ہزارہ برادری کی بڑی آبادی ہے

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے ضلع بولان کے حکام کا کہنا ہے کہ ایک گاڑی پر فائرنگ کے نتیجے میں چھ افراد ہلاک ہو گئے ہیں۔

ابتدائی اطلاعات کے مطابق اس گاڑی پر ضلع بولان کے علاقے مچھ میں فائرنگ کی گئی۔

لیویز فورس مچھ کے ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ افراد کوئلے کی کان میں کام کرنے والے مزدور تھے جن کا تعلق ہزارہ برادری سے تھا۔

ذرائع کے مطابق یہ افراد مچھ ٹاؤن سے کوئلے کی کان کی جانب جا رہے تھے جب پنڈار گدھ کے علاقے میں ان کی گاڑی پر نامعلوم افراد نے فائرنگ کردی۔

گاڑی میں سات افراد سوار تھے۔

واضح رہے کہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ کے بعد مچھ میں ہزارہ برادری کی دوسری بڑی آبادی موجود ہے۔اس سے قبل بھی اس علاقے میں اہلِ تشیع ہزارہ برادری کے افراد کو نشانہ بنایا جا چکا ہے۔

دوسری جانب ہزارہ ڈیموکریٹک پارٹی نے اس واقعے کی پرزور مذمت کی ہے۔

ہزارہ ڈیموکریٹک پارٹی کے سربراہ عبدالخالق ہزارہ نے کہا کہ بے گناہ مزدوروں کی ہلاکت صوبائی حکومت کے لیے لمحۂ فکریہ ہے۔ انھوں نے مطالبہ کیا کہ ہزارہ برادری کو نشانہ بنانے والوں کے خلاف ٹارگٹ آپریشن کیا جائے۔

No comments:

Post a Comment